شعر و ادب

ابھی تو زعم ہے تم کو

یہ تحریر 232مرتبہ پڑھی گئی۔

TOP