شعر و ادب

پاک فوج کو سلام

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

تیرے عزم کا بیاں،یہ زمین و آسماں

تیرے دم سے جاوداں ،اس زمیں کی داستاں

شادماں رواں دواں

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

تیری ضربِ عضب سےؓ،دشمنوں میں تھرتھری

تیرا نعرہ آہنی ، عزمِ نو کی برتری

تو صدائے حیدریؓ

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

۔تو روایتِ امیں حمزہؓ و زبیرؓ ہے

تیری ہمتوں تلے آسماں بھی زیر ہے

تو وطن کی خیر ہے

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

پانیوں کی سلطنت میں ضوفشاں ترے علَم

جراتوں کے باب میں تیرانام ہے رقم

تو ہے قوم کا بھرم

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

شہپرانِ آسماں،عظمتوں کے ترجماں

تیری ضربتِ گراں،تَک رہی ہے کہکشاں

عزم ہے جواں جواں

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

لشکرِ عدو پہ تو،چھا گیا ہے کو بہ کو

ملک و دین کے لیے تو ہوا ہے رو بہ رو

تو رہے گا سر خرو

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

تیری ایک ضرب سے کوہسار کٹ گئے

دشمنوں کے مورچے،الٹ گئے پلٹ گئے

زلزلے سمٹ گئے

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

بدر ہو کہ کربلا،نقش ہے تیری ادا

تو ہے قوم کی بقا،تجھ سے قوم کی فلاح

ہے صدائے مرحبا

پاک فوج کو سلام۔۔۔۔۔پاک فوج کو سلام

تو ہے امن کا پیام

ابصار احمد

یہ تحریر 65مرتبہ پڑھی گئی۔

TOP