شعر و ادب

عقل و دِل

ہر خاکی و نوری پہ حکومت ہے خِرد کی
باہر نہیں کچھ عقلِ خداداد کی زد سے
عالم ہے غلام اس کے جلالِ اَ زلی کا
اِک دل ہے کہ ہر لحظہ الجھتا ہے خِرد سے

یہ تحریر 48مرتبہ پڑھی گئی۔

TOP