اداریہ

اداریہ-قوم اور افواج ہر مشکل گھڑی میں ساتھ

دفاع کسی بھی ملک کی اولین ترجیح ہوتا ہے کہ وطن کی سرحدیں جتنی محفوظ ہوں اُس کی سالمیت اُتنی ہی مضبوط گردانی جاتی ہے۔ افواج کی بنیادی ذمہ داری ملک کی سرحدوں کی حفاظت کو یقینی بنانا ہوتا ہے۔ افواجِ پاکستان اپنا یہ فریضہ بطریقِ احسن نبھا رہی ہیں۔ افواجِ پاکستان نہ صرف پیشہ ورانہ اعتبار سے دنیا کی دیگر افواج کے مقابلے میں چنداں کم نہیں ہیں بلکہ جدید ترین ہتھیاروں سے لیس یہ ایسی افواج ہیں جنہوں نے وقت پڑنے پرہمیشہ بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔ الحمدﷲافواجِ پاکستان اندرونی اور بیرونی خطرات سے نمٹنے کے ساتھ ساتھ اگر ملک یا قوم کو قدرتی آفات کا سامنا ہو تو بھی یہ ہراول دستے کا کردار ادا کرتی دکھائی دیتی ہیں۔ اکتوبر2005 کے زلزلے ‘ 2010 اور پھر2011 کے جان لیوا سیلاب کی آفات میں افواجِ پاکستان نے جس طرح آگے بڑھ کر حالات کو سنبھالا اور اپنے ملک کے شہریوں کی جان و مال کے تحفظ کے لئے انہیں رہائش‘ خوراک اورطبی سہولتیں بہم پہنچائیں‘ وہ قابل ستائش ہے۔

 

26اکتوبر2015 کے تباہ کن زلزلے کے موقع پر بھی افواجِ پاکستان کا یہی جذبہ دیکھنے میں آیاہے۔ چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف نے فوج کو حکم دیا کہ وہ ’فارمل آرڈرز‘ کا انتظار کئے بغیر جہاں جہاں ضرورت ہے‘ زلزلہ زدگان کی مدد کو پہنچیں اور اُن کی بحالی کے لئے کام کریں۔الغرض پاک فوج نے متاثرہ علاقوں سے زخمیوں کو فوری طور پر ہیلی کاپٹرز کے ذریعے مختلف کمبائنڈ ملٹری ہسپتالوں میں پہنچانا شروع کیا۔ملبے تلے دبے ہوئے شہریوں کو نکالنے اور اُنہیں فوری طور پر فرسٹ ایڈ بہم پہنچانے سمیت مختلف جگہوں پر راشن اورخوراک کا بندوبست بھی کیا گیا۔ علاوہ ازیں فوج نے آرمی چیف کی ہدایات پر فوری طورپر ٹیمیں تشکیل دیں، اُنہیں زلزلے سے ہونے والی تباہی کا ٹھیک ٹھیک اندازہ لگانے کی ذمہ داری دی گئی تاکہ متاثرہ علاقوں میں اُن کی ضرورت کے مطابق مشینری اور افرادی قوت بھجوائی جاسکے۔زلزلے سے صوبہ خیبر پختونخوا میں چونکہ نقصان زیادہ ہوا تھا لہٰذا آرمی چیف بذاتِ خود جائزہ لینے کے لئے پشاور روانہ ہوگئے۔ جہاں کمانڈر پشاور کور نے اُنہیں زلزلے سے ہونے والی تباہی اور فوجی جوانوں کی جانب سے کی گئی کارروائیوں کے حوالے سے آگاہ کیا۔ آرمی چیف نے زلزلہ زدگان کی فوری اور ہر ممکن امداد کی ہدایت کی۔

 

بلاشبہ فوج اور عوام کی یہ محبت مضبوط دفاع اور روشن پاکستان کی ضمانت ہے کہ افواج جنگیں لڑتی ہیں تو قوم اُن کی پشت پر کھڑی ہوتی ہے‘ جب قوم کو کسی آفت کا سامنا ہوتا ہے تو افواج اُن کی دادرسی کے لئے ان کی دہلیز پر موجودہوتی ہیں۔ پاکستانی قوم اور افواجِ پاکستان ہر مشکل گھڑی میں ایک دوسرے کے ساتھ ہیں جو پاکستان کے استحکام کی عکاسی کرتی ہے۔

یہ تحریر 80مرتبہ پڑھی گئی۔

TOP